18

تحریک انصاف ضلع ملتان کا ہنگامی اجلاس سیکرٹریٹ کیلئے ملتان کے علاوہ اور کوئی شہر قبول نہیں۔

پاکستان ضلع ملتان کا ہنگامی اجلاس ضلعی صدر ملتان چوہدری خالد جاوید وڑائچ کی صدارت میں ضلعی دفتر ملتان میں منعقد ہوا۔ اجلاس سے خطاب کرتے ہوے چوہدری خالد جاوید وڑائچ نے کہا کے جنوبی پنجاب سب سیکرٹریٹ کے حوالے سے میڈیا اور سوشل میڈیا پر لوگوں میں بے چینی پائی جاتی ہے جس کو حل کرنا موجودہ حکومت ،ارکان صوبائی و قومی اسمبلی اور تنظیموں کا فرض ہے۔
جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ کے قیام کا فیصلہ ساڑھےتین کروڑ عوام کی سہولت کے لئے کیاگیا ہے تو عوام کی رائے کو مقدم رکھا جاتا ہے یہ نہیں ہوتا کے ایک انسان خوائش کچھ کرے اور اسے دے کچھ اور دیا جائے۔
جنوبی پنجاب کی عوام کی امنگوں کی ترجمانی نہیں کی جا رہی چند لوگ اپنے ذاتی مفاد کے لئے کام کر رہے ہیں جو کہ انتہائی قابل مذمت ہے جسے ہم مسترد کرتے ہیں۔
اس موقع پر ان کے ہمراہ ضلعی جنرل سیکرٹری اعجاز لوٹھڑ ، ضلعی سیکرٹری اطلاعات عامر انور قریشی ،یاسر خان ،خواجہ وقاص ، شیخ عبدالسلام عارف ، ندیم انور ، نواب عاشق خان بادوزء، کامران کھوکھر ،عاطف اعوان ، حافظ مشتاق ، فہد اسحاق سانگی ، سلیم بخاری ، شہریار بھٹہ، ملک اللہ رکھا کھوکھر ، حافظ کامران ، دلیرخان مہار ، سید اقبال بخاری ، عزیز خان ، راو عادل،چوہدری ارشد ، ندیم گجر، ڈاکٹر صلاح دین ، شہزاد افشار موجود تھے۔
انہوں نے کہا کے جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ کا فیصلہ جنوبی پنجاب کہ اراکین قومی و صوبائی اسمبلی تمام کی مشاورت سے کیا جائے یا ریفرینڈم سے فیصلہ کیا جائے۔
پاکستان تحریک انصاف کی حکومت انصاف کے نام سے بنی تھی اور میرٹ پارٹی منشور میں شامل تھا اور اگر ہم اپنے منشور پر عمل کرتے ہیں تو ملتان کہ علاوہ کوئی دوسرا شہر جنوبی پنجاب کے میرٹ پر پورا نہیں اترتا ملتان کی ایک تاریخی اور جغرافیائی اہمیت ہے جسے جھٹلایا نہیں جا سکتا۔ اور جتنی سہولیات کسی دارلخلافہ میں ہونی چاہیں وہ سب ملتان میں موجود ہیں جبکہ کسی بھی دوسرے شہر میں موجود نہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں